Please enable JavaScript to see daily hadith

Actual Islam

Islam is a Religion of peace

﴿وَيْلٌ لِلْمُطَفِّفِينَ١ الَّذِينَ إِذَا اكْتَالُوا عَلَى النَّاسِ يَسْتَوْفُونَ٢ وَإِذَا كَالُوهُمْ أَوْ وَزَنُوهُمْ يُخْسِرُونَ٣ أَلَا يَظُنُّ أُولَئِكَ أَنَّهُمْ مَبْعُوثُونَ٤ لِيَوْمٍ عَظِيمٍ٥ يَوْمَ يَقُومُ النَّاسُ لِرَبِّ الْعَالَمِينَ٦ كَلَّا إِنَّ كِتَابَ الْفُجَّارِ لَفِي سِجِّينٍ٧ وَمَا أَدْرَاكَ مَا سِجِّينٌ٨ كِتَابٌ مَرْقُومٌ٩ وَيْلٌ يَوْمَئِذٍ لِلْمُكَذِّبِينَ١٠ الَّذِينَ يُكَذِّبُونَ بِيَوْمِ الدِّينِ١١ وَمَا يُكَذِّبُ بِهِ إِلَّا كُلُّ مُعْتَدٍ أَثِيمٍ١٢ إِذَا تُتْلَى عَلَيْهِ آيَاتُنَا قَالَ أَسَاطِيرُ الْأَوَّلِينَ١٣ كَلَّا  بَلْ  رَانَ عَلَى قُلُوبِهِمْ مَا كَانُوا يَكْسِبُونَ١٤ كَلَّا إِنَّهُمْ عَنْ رَبِّهِمْ يَوْمَئِذٍ لَمَحْجُوبُونَ١٥ ثُمَّ إِنَّهُمْ لَصَالُو الْجَحِيمِ١٦ ثُمَّ يُقَالُ هَذَا الَّذِي كُنْتُمْ بِهِ تُكَذِّبُونَ١٧ كَلَّا إِنَّ كِتَابَ الْأَبْرَارِ لَفِي عِلِّيِّينَ١٨ وَمَا أَدْرَاكَ مَا عِلِّيُّونَ١٩ كِتَابٌ مَرْقُومٌ٢٠ يَشْهَدُهُ الْمُقَرَّبُونَ٢١ إِنَّ الْأَبْرَارَ لَفِي نَعِيمٍ٢٢ عَلَى الْأَرَائِكِ يَنْظُرُونَ٢٣ تَعْرِفُ فِي وُجُوهِهِمْ نَضْرَةَ النَّعِيمِ٢٤ يُسْقَوْنَ مِنْ رَحِيقٍ مَخْتُومٍ٢٥ خِتَامُهُ مِسْكٌ  وَفِي ذَلِكَ فَلْيَتَنَافَسِ الْمُتَنَافِسُونَ٢٦ وَمِزَاجُهُ مِنْ تَسْنِيمٍ٢٧ عَيْنًا يَشْرَبُ بِهَا الْمُقَرَّبُونَ٢٨ إِنَّ الَّذِينَ أَجْرَمُوا كَانُوا مِنَ الَّذِينَ آمَنُوا يَضْحَكُونَ٢٩ وَإِذَا مَرُّوا بِهِمْ يَتَغَامَزُونَ٣٠ وَإِذَا انْقَلَبُوا إِلَى أَهْلِهِمُ انْقَلَبُوا فَكِهِينَ٣١ وَإِذَا رَأَوْهُمْ قَالُوا إِنَّ هَؤُلَاءِ لَضَالُّونَ٣٢ وَمَا أُرْسِلُوا عَلَيْهِمْ حَافِظِينَ٣٣ فَالْيَوْمَ الَّذِينَ آمَنُوا مِنَ الْكُفَّارِ يَضْحَكُونَ٣٤ عَلَى الْأَرَائِكِ يَنْظُرُونَ٣٥ هَلْ ثُوِّبَ الْكُفَّارُ مَا كَانُوا يَفْعَلُونَ٣٦﴾ [المطففين: 1-36]

«ناپ اور تول میں کمی کرنے والوں کے لیے خرابی ہے(1) جو لوگوں سے ناپ کر لیں تو پورا لیں(2) اور جب ان کو ناپ کر یا تول کر دیں تو کم کر دیں(3) کیا یہ لوگ نہیں جانتے کہ اٹھائے بھی جائیں گے(4) (یعنی) ایک بڑے (سخت) دن میں(5) جس دن (تمام) لوگ رب العالمین کے سامنے کھڑے ہوں گے(6) سن رکھو کہ بدکارروں کے اعمال سجّین میں ہیں(7) اور تم کیا جانتے ہوں کہ سجّین کیا چیز ہے؟(8) ایک دفتر ہے لکھا ہوا(9) اس دن جھٹلانے والوں کی خرابی ہے(10) (یعنی) جو انصاف کے دن کو جھٹلاتے ہیں(11) اور اس کو جھٹلاتا وہی ہے جو حد سے نکل جانے والا گنہگار ہے(12) جب اس کو ہماری آیتیں سنائی جاتی ہیں تو کہتا ہے کہ یہ تو اگلے لوگوں کے افسانے ہیں(13) دیکھو یہ جو (اعمال بد) کرتے ہیں ان کا ان کے دلوں پر زنگ بیٹھ گیا ہے(14) بےشک یہ لوگ اس روز اپنے پروردگار (کے دیدار) سے اوٹ میں ہوں گے(15) پھر دوزخ میں جا داخل ہوں گے(16) پھر ان سے کہا جائے گا کہ یہ وہی چیز ہے جس کو تم جھٹلاتے تھے(17) (یہ بھی) سن رکھو کہ نیکوکاروں کے اعمال علیین میں ہیں(18) اور تم کو کیا معلوم کہ علیین کیا چیز ہے؟(19) ایک دفتر ہے لکھا ہوا(20) جس کے پاس مقرب (فرشتے) حاضر رہتے ہیں(21) بےشک نیک لوگ چین میں ہوں گے(22) تختوں پر بیٹھے ہوئے نظارے کریں گے(23) تم ان کے چہروں ہی سے راحت کی تازگی معلوم کر لو گے(24) ان کو خالص شراب سربمہر پلائی جائے گی(25) جس کی مہر مشک کی ہو گی تو (نعمتوں کے) شائقین کو چاہیے کہ اسی سے رغبت کریں(26) اور اس میں تسنیم (کے پانی) کی آمیزش ہو گی(27) وہ ایک چشمہ ہے جس میں سے (خدا کے) مقرب پیئیں گے(28) جو گنہگار (یعنی کفار) ہیں وہ (دنیا میں) مومنوں سے ہنسی کیا کرتے تھے(29) اور جب ان کے پاس سے گزرتے تو حقارت سے اشارے کرتے(30) اور جب اپنے گھر کو لوٹتے تو اتراتے ہوئے لوٹتے(31) اور جب ان (مومنوں) کو دیکھتے تو کہتے کہ یہ تو گمراہ ہیں(32) حالانکہ وہ ان پر نگراں بنا کر نہیں بھیجے گئے تھے(33) تو آج مومن کافروں سے ہنسی کریں گے(34) (اور) تختوں پر (بیٹھے ہوئے ان کا حال) دیکھ رہے ہوں گے(35) تو کافروں کو ان کے عملوں کا (پورا پورا) بدلہ مل گیا(36)» [المطففين: 1-36]

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com
×

Assalam o Alikum Warahmatullah!

Click one of our representatives below to chat on WhatsApp or send us an email to ms170400726@vu.edu.pk

× How can I help you?